Saturday , September 22 2018
Home / ہندوستان / یمن میں حوثی قبیلہ پر حملے بند کردیئے جائیں

یمن میں حوثی قبیلہ پر حملے بند کردیئے جائیں

نئی دہلی۔/24اپریل، ( فیکس ) شاہی امام مسجد فتحپوری دہلی مفتی محمد مکرم احمد نے آج نماز جمعہ سے قبل خطاب میں کہا کہ اللہ کا وعدہ سچا ہے جو اس کے احکام کی پیروی کرتے ہوئے اس کے نبی صلی اللہ علیہ وسلم کی سچی اطاعت کرتا ہے وہ اللہ کا ولی بن جاتا ہے ، وہ اللہ کے دین کو بندوں میں پھیلانے میں اہم رول ادا کرتا ہے۔ شاہی امام نے کہا کہ ایسے ہی ایک ال

نئی دہلی۔/24اپریل، ( فیکس ) شاہی امام مسجد فتحپوری دہلی مفتی محمد مکرم احمد نے آج نماز جمعہ سے قبل خطاب میں کہا کہ اللہ کا وعدہ سچا ہے جو اس کے احکام کی پیروی کرتے ہوئے اس کے نبی صلی اللہ علیہ وسلم کی سچی اطاعت کرتا ہے وہ اللہ کا ولی بن جاتا ہے ، وہ اللہ کے دین کو بندوں میں پھیلانے میں اہم رول ادا کرتا ہے۔ شاہی امام نے کہا کہ ایسے ہی ایک اللہ کے ولی خواجہ غریب نواز ؒاجمیری ہیں جن کا فیضان ہندوستان میں تقریباً 830سال سے جاری ہے۔ انہوں نے عبادت اور ریاضت ، تقویٰ اور طہارت، انسان دوستی اور خدمت خلق کا جو پرچم بلند کیا وہ اللہ کے پاس مقبول ہوا اور آج اللہ کے حکم سے ان کا پرچم بلند ہورہا ہے۔ شاہی امام نے کہا کہ اولیاء اللہ سے عقیدت ایمان میں تازگی پیدا کرتی ہے۔ شاہی امام نے کہا کہ اس سال 830ویں عرس کے موقع پر خواجہ کے دربار میں چادر شریف کا نذرانہ امریکہ کے صدر براک اوباما اور وزیر اعظم ہندوستان نے بھی پیش کیا ہے۔ سابق وزیر اعظم واجپائی، سونیاگاندھی، اروند کجریوال اور دیگر سیاسی و سماجی رہنماؤں نے بھی چادر شریف کا نذرانہ پیش کیا ہے، ہم اسے ایک اچھا قدم مانتے ہیں اور اپیل کرتے ہیں کہ یہ حضرت خواجہ غریب نواز ؒ کے مشن کو اپنائیں تب ہی سچی عقیدت ہوگی۔ حضرت خواجہ غریب نواز ؒ نے خدمت خلق اور انسان دوستی کا جو اعلیٰ نمونہ پیش کیا تھا جس میں ظلم اور تشدد، کسی بھی طرح کا مذہبی تشدد اور امتیاز نہیں تھا، ان لیڈروں کو اسے اپناکر خواجہ ؒ کی بارگاہ میں عقیدت پیش کرنی چاہیئے۔

شاہی امام نے کہا کہ دو روز قبل ہندوستان کے وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ کا یہ بیان میڈیا میں شائع ہوا کہ بغیر کسی مذہبی اور نسلی امتیاز کے ہماری حکومت سب کے ساتھ انصاف کرنے کی پابند ہے۔ یہ بیان تو اچھا ہے لیکن جو لوگ اشتعال انگیزی اور فرقہ پرستی کے ایجنڈہ کو نافذ کرنے پر لگے ہوئے ہیں اور وزیر داخلہ کی سیاسی پارٹی کے لیڈر ہیں انہیں لگام نہیں دے کر حکومت بہت بڑی غلطی کررہی ہے۔ وزیر اعظم سیاسی لیڈروں کی خطاء پر تو ان کی سرزنش کرتے ہیں لیکن فرقہ پرست لیڈروں کی تو سرزنش بھی نہیں کی جاتی۔ شاہی امام نے ورنگل میں فرضی انکاؤنٹر میں پانچ مسلم قیدی نوجوانوں کے قتل پر حقائق معلوم کرنے والی ٹیم کی رپورٹ کے حوالہ سے کہا کہ ورنگل میں جو ظلم ہوا ہے ان پولیس اہلکاروں کو معطل کیا جائے اور اس معاملہ کی عدالتی انکوائری کرائی جائے۔ یہ سراسر ظلم ہے جس سے حکومت اپنا دامن نہیں بچاسکتی۔ شاہی امام نے یمن کے حوثی قبیلہ پر سعودی عرب اتحادی حملوں کی مذمت کی اور کہا کہ یہ حملے بند ہونے چاہیئے اور مذاکرات کے ذریعہ مسائل کا حل تلاش کیا جانا چاہیئے۔ دونوں طرف ہی مسلمانوں کی ہلاکت ہے۔ جان و مال کا ضیاع ہے یہ بند ہونا چاہیئے۔ سعودی عرب کو مسجد اقصیٰ کے مشن کی اسی طرح قیادت کرنی چاہیئے اور اپنے ا س فریضہ کو انجام دینا چاہیئے۔

TOPPOPULARRECENT