Sunday , December 17 2017
Home / Top Stories / ’’یونیورسٹی ، جمہوریت اور دستور بچاؤ ‘‘اے آئی ایس ایف کی ملک گیر تحریک

’’یونیورسٹی ، جمہوریت اور دستور بچاؤ ‘‘اے آئی ایس ایف کی ملک گیر تحریک

نئی دہلی 12 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) آل انڈیا اسٹوڈنٹس فیڈریشن کی قومی عاملہ کا اجلاس دہلی میں 9 اور 10 اپریل کو منعقد کیا گیا جس میں اپیل کی گئی کہ تنظیم کی یونیورسٹی بچاؤ، جمہوریت بچاؤ اور دستور بچاؤ ملک گیر تحریک کو تقویت دی جائے۔ 5 قراردادیں منظور کی گئیں جن میں روہت ویمولا کو انصاف کے لئے جدوجہد کرنے کی تحریک بھی شامل ہے۔

پہلی تحریک یونیورسٹیوں کی خود اختیاری پر حملوں کے خلاف جدوجہد، روہت اور ڈیلٹا میگوال کو انصاف فراہم کرنے اور روہت قانون کی قانون سازی کا مطالبہ، تیسری قرارداد تعلیمی فنڈ میں تخفیف اور فیس میں اضافہ (آئی آئی ٹی اور دیگر اہم تعلیمی اداروں میں) کے خلاف جدوجہد اور پانچویں قرارداد طلبہ تحریک کو ذرائع ابلاغ کے افراد اور گھرانوں، اساتذہ، دانشوروں اور دنیا بھر کے عوام کی جانب سے تائید پر اظہار تشکر پر مبنی ہے۔ قومی کونسل نے فیصلہ کیاکہ (1) ملک گیر مہم 14 اپریل (ڈاکٹر بھیم راؤ امبیڈکر کی تاریخ پیدائش) سے شروع کی جائے گی اور اس کا اختتام 5 مئی (کارل مارکس کی تاریخ پیدائش) پر ہوگا۔ تحریک کا نام ’’یونیورسٹی بچاؤ، جمہوریت بچاؤ اور دستور بچاؤ‘‘ ہوگا۔ (2) یونیورسٹی طلبہ ماہ مئی میں کنونشن کا اہتمام کریں گے اور ماہ اگسٹ میں طلبہ کی پارلیمنٹ تمام جمہوری طلبہ تنظیموں کے اشتراک سے منعقد کئے جائیں گے۔ (3) ماہ جون اور جولائی میں طلبہ کے لئے سیاسی کلاسیس کا اہتمام کیا جائے گا۔ نمبر (4) کل ہند لڑکیوں کا کنونشن 28 تا 30 سپٹمبر 2016 ء پنجاب کے شہر جالندھر منعقد کیا جائے گا۔ قومی کونسل میں کامریڈ مکیش پنہر ریاستی صدر جموں و کشمیر کے بارے میں شدید فکرمندی ظاہر کی جو آئی آئی ٹی کشمیر پر حملہ کے خلاف احتجاج کے دوران بے ہوش ہوگئے تھے۔ 41 قومی کونسلرس جن کا تعلق 19 ریاستوں سے تھا اجلاس میں شریک ہوئے جس کی صدارت قومی صدر کامریڈ ولی اللہ قادری نے کی۔ کام اور جائزہ رپورٹ جنرل سکریٹری کامریڈ وشواجیت کمار نے پیش کی۔

TOPPOPULARRECENT