Monday , July 16 2018
Home / Top Stories / یوپی کی یوگی حکومت جرائم کے تدارک میں ناکام

یوپی کی یوگی حکومت جرائم کے تدارک میں ناکام

ریاست میں کوئی لا اینڈ آرڈر نہیں، صدر سماج وادی پارٹی اکھیلیش یادو کا الزام

لکھنؤ۔ 10 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) باغپت ڈسٹرکٹ جیل میں گینگسٹر منا بجرنگی کو گولی مار دینے کے ایک دن بعد اُترپردیش کے سابق چیف منسٹر اکھیلیش یادو نے آج یوگی آدتیہ ناتھ حکومت پر شدید تنقید کی اور الزام عائد کیا کہ وہ ریاست میں لا اینڈ آرڈر کی برقراری کو یقینی بنانے میں ناکام ہوچکی ہے جبکہ اس الزام کو بی جے پی حکومت کی جانب سے مسترد کردیا گیا ہے۔ سماج وادی پارٹی کے صدر نے ٹوئٹ کیا کہ ’’ان دنوں اُترپردیش میں کوئی لا اینڈ آرڈر نہیں ہے۔ بس فکر مندی کا ایک ماحول ہے۔ جرم کا ارتکاب کرنے والے اس قدر دلیر ہوچکے ہیں کہ انہوں نے کسی کو جیل میں قتل کر ڈالا ہے۔ یہ حکومت کی ناکامی ہے۔ ریاست کے عوام بہت خوف زدہ ہیں۔ ریاست میں کبھی اس طرح کی غلط حکمرانی اور بدانتظامی نہیں دیکھی گئی‘‘۔ حکومت یوپی کے ترجمان اور سینئر کابینی وزیر سدھارتھ ناتھ سنگھ نے تاہم ان کے الزامات کو مسترد کردیا اور کہا کہ لا اینڈ آرڈر، ایس پی کے سابق دور حکومت کے مقابل بہتر ہے اور پولیس ریاست بھر میں مجرمین کے ساتھ بہتر انداز میں نمٹ رہی ہے۔ منا بجرنگی کو کل باغپت ڈسٹرکٹ جیل کے اندر ساتھی قیدی نے گولی مارکر ہلاک کردیا تھا۔ صدر سماج وادی پارٹی نے کہا کہ اس پر کارروائی کرتے ہوئے ریاستی حکومت نے جیلر، ڈپٹی جیلر، ہیڈ وارڈن اور وارڈن کو معطل کرنے کے علاوہ اس کی عدالتی تحقیقات کا حکم بھی دیا ہے تاکہ اس جرم کے پس پردہ کون کارفرما ہے، اس کا پتہ چلایا جاسکے۔

TOPPOPULARRECENT