Tuesday , September 18 2018
Home / Top Stories / یوپی کے شہر میں تازہ تشدد ، دوکانات ، بس نذر آتش

یوپی کے شہر میں تازہ تشدد ، دوکانات ، بس نذر آتش

وی ایچ پی اور اے بی وی پی کی ریلی پر پتھراؤ کا نتیجہ، مغربی شہر کاس گنج میں امتناعی احکام نافذ
کاس گنج۔ 27جنوری۔( سیاست ڈاٹ کام ) اُترپردیش کے شہر کاس گنج میں آج تشدد کے دوسرے روز شرپسندوں نے کم ازکم تین دوکانات کو نقصان پہنچایا اور چند دیگر کاروباری اداروں کو آگ لگادی ۔ کل یوم جمہوریہ کے موقع پر نکالی گئی موٹر سیکل ریالی پر پتھراؤ کے بعد جھڑپیں پیش آئی جس میں ایک نوجوان لڑکے کی ہلاکت ہوگئی ۔ شہر میں گزشتہ روز کرفیو لگانا پڑا تھا جبکہ آج تازہ کشیدگی کے ساتھ آتشزدگی کا واقعہ پیش آیا جس میں ایک بس جلائی گئی ۔ ریاستی حکومت کے ترجمان نے کہا کہ مغربی اُترپردیش کے شہر میں امتناعی احکام بدستور لاگو رہیں گے لیکن یہ وضاحت نہیں کی گئی کہ آیا کرفیو برخاست کردیا گیا ہے ۔ فائر بریگیڈ کے عملے کو مختلف جگہوں پر آگ پر قابو پانے کیلئے حرکت میں لایا گیا ہے ۔ آر اے ایف اور پی ا ے سی کے عملے نے سارے ضلع میں چوکسی بڑھادی ہے ، جہاں سرحدوں کی ناکہ بندی کردی گئی ہے تاکہ شہر میں نقصِ امن کی کوئی بھی کوشش کامیاب نہ ہونے پائے اور بیرون ضلع سے شر پسند عناصر کو داخلے سے روکا جاسکے۔ تازہ تشدد کا پس منظر یہ ہے کہ کل شہر میں جھڑپوں کے نتیجہ میں 16 سالہ لڑکے کی موت ہوئی اور دو دیگر افراد زخمی ہوئے تھے۔ کل کی جھڑپیں 69 ویں یوم جمہوریہ تقاریب کے حصہ کے طورپر وی ایچ پی اور اے بی وی پی والنٹیرس نے موٹر سیکل ریالی نکالی جس پر سنگباری کی گئی ۔ یوپی پولیس نے آج ایک ٹوئٹ میں کہاکہ تشدد کے سلسلے میں کم از کم 9 افراد گرفتار کرلئے گئے ہیں ۔ ایڈیشنل ڈی جی ( لاء اینڈ آرڈر)آنند کمار نے کہاکہ آج غیرسماجی عناصر نے شہر کے مضافات میں واقع ایک چھوٹی دوکان کو آگ لگانے کی کوشش کی ۔ بعض غیرسماجی عناصر کو تحویل میں لے لیا گیا جبکہ دیگر بھاگ گئے ۔ انھوں نے میڈیا والوں کو بتایا کہ اس موقع پر ہماری اہم ذمہ داری یہ یقینی بنانا ہے کہ معمول کی لاء اینڈ آرڈر صورتحال اور مختلف برادریوں میں بھائی چارہ برقرار رہے ۔

TOPPOPULARRECENT