Sunday , September 23 2018
Home / سیاسیات / یو پی اے ارکان پارلیمنٹ کیلئے سونیا گاندھی کا ظہرانہ

یو پی اے ارکان پارلیمنٹ کیلئے سونیا گاندھی کا ظہرانہ

نئی دہلی 10 جون ( سیاست ڈاٹ کام ) یو پی اے کی صدر نشین سونیا گاندھی نے آج یو پی اے کے ارکان پارلیمنٹ کے اعزاز میں ایک ظہرانہ کااہتمام کیا ۔ انہوں نے اپوزیشن اتحاد کے قائدین کے ساتھ کل ایک اجلاس منعقد کرکے اپوزیشن کی حکمت عملی پر غور کیا تھا ۔ آج کے ظہرانہ میں کانگریس اور یو پی اے حلیفوں این سی پی ‘ نیشنل کانفرنس ‘ آر ایل ڈی ‘ انڈین یونین

نئی دہلی 10 جون ( سیاست ڈاٹ کام ) یو پی اے کی صدر نشین سونیا گاندھی نے آج یو پی اے کے ارکان پارلیمنٹ کے اعزاز میں ایک ظہرانہ کااہتمام کیا ۔ انہوں نے اپوزیشن اتحاد کے قائدین کے ساتھ کل ایک اجلاس منعقد کرکے اپوزیشن کی حکمت عملی پر غور کیا تھا ۔ آج کے ظہرانہ میں کانگریس اور یو پی اے حلیفوں این سی پی ‘ نیشنل کانفرنس ‘ آر ایل ڈی ‘ انڈین یونین مسلم لیگ کے علاوہ آر جے ڈی سربراہ لالو پرساد یادو ‘ جھارکھنڈ مکتی مورچہ سربراہ شبھو سورین نے بھی شرکت کی ۔ سونیا گاندھی نے پارلیمنٹ انیکسی میں منعقد ظہرانہ میں تمام قائدین سے ملاقات کی ۔

مرکزی وزیر وی کے سنگھ سے کانگریس کا استعفی کا مطالبہ
نئی دہلی 10 جون ( سیاست ڈاٹ کام ) کانگریس نے آج مرکزی وزیر وی کے سنگھ سے استعفی کا مطالبہ کیا ہے ۔ پارٹی نے کہا کہ این ڈی اے حکومت نے سپریم کورٹ میں فوجی نائب سربراہ دلبیر سنگھ سہاگ کو ترقی کے مسئلہ پر جو حلفنامہ داخل کیا ہے اس سے وی کے سنگھ میں اعتماد کے فقدان کا پتہ چلتا ہے ۔ کانگریس ترجمان ابھیشیک سنگھوی نے اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ یہ وزیر موصوف وزارتی کونسل میں شامل نہیں رہ سکتے ۔ یہ ایسا مسئلہ ہے جس میں یا تو انہیں وزارت سے علیحدہ کیا جانا چاہئے یا انہیں خود استعفی پیش کرنا ہوگا ۔ وی کے سنگھ سابق فوجی سربراہ ہیں۔ ان کی تاریخ پیدائش پر ان کا یو پی اے حکومت کے ساتھ تنازعہ پیدا ہوگیا تھا اتفاق کی بات یہ ہے کہ سنگھ وہ پہلے وزیر ہیں جن سے کانگریس نے استعفی کا مطالبہ کیا ہے جب سے بی جے پی نے مرکز میں حکومت تشکیل دی ہے ۔ واضح رہے کہ مرکزی حکومت نے آج ہی سپریم کورٹ میں نائب فوجی سربراہ دلبیر سنگھ کے تعلق سے حلفنامہ داخل کیا ہے اور الزام عائد کیا ہے کہ جنرل سہاگ پر جو امتناع عائد کیا گیا تھا اس کی وجوہات پہلے سے طئے شدہ تھیں۔

TOPPOPULARRECENT