Tuesday , December 12 2017
Home / ہندوستان / یو پی میں زہریلی شراب سے اموات پر سزائے موت

یو پی میں زہریلی شراب سے اموات پر سزائے موت

لکھنو۔20 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) اترپردیش کے غیر قانونی شراب مافیا کا ناطقہ بند کرنے کی کوشش کے طور پر ریاستی حکومت نے ایکسائز ایکٹ میں ایک سیکشن کا اضافہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے تاکہ زہریلی شراب کی وجہ سے اموات کے لیے ذمہ دار افراد کو سزائے موت یا عمر قید کو یقینی بنایا جاسکے۔ ایک سینئر وزیر نے کہا کہ ریاستی حکومت اس ضمن میں عنقریب آرڈیننس جاری کرسکتی ہے۔ سزائے موت کی گنجائش کا اضافہ کرنے کا فیصلہ چیف منسٹر یوگی ادتیہ ناتھ کی صدارت میں ریاستی کابینہ کے اجلاس میں کیا گیا۔ وزیر آبکاری جئے پرتاپ سنگھ نے نیوز ایجنسی پی ٹی آئی کو بتایا کہ اس اقدام سے زہریلی شراب کے مافیہ پر روک لگانے میں مدد ملے گی۔ دہلی اور گجرات کے بعد اترپردیش ایسی تیسری ریاست بن جائے گی جہاں خاطیوں کو پھانسی کے تختے پر بھیجا جاسکے گا۔

پلانی سوامی نے مقدس ڈبکی لگائی، دینا کرن کی نکتہ چینی
مائیلادوتو رائے(ٹاملناڈو) ۔ 20 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) ٹاملناڈو میں جاری سیاسی کشاکش کے درمیان چیف منسٹر پلانی سوامی نے آج دریائے کاویری میں ڈبکی لگائی جس پر ان کے حریف دینا کرن نے طنز کرتے ہوئے کہا کہ چاہے کتنی ہی مقدس ڈبکیاں لگالیں ان کی دغابازی کا پاپ دھل نہیں سکتا۔ چیف منسٹر نے یہ ڈبکی ضلع ناگاپٹنم کے مائیلا دوتو رائے کی ایک مندر میں منعقدہ کاویری پشکرم میں لگائی۔ پلانی سوامی کے ہمراہ سینئر پارٹی قائدین بشمول وزیر پارچہ جات او ایس مانین اور چیف گورنمنٹ وہپ ایس راجندرن تھے۔ دینا کرن نے کہا کہ چیف منسٹر کی ایسی حرکتوں سے انہیں کچھ فائدہ ہونے والا نہیں بلکہ دریا کا خالص پن ہی خراب ہوگا۔

TOPPOPULARRECENT