Tuesday , November 21 2017
Home / ہندوستان / یو پی میں 3 سال میں 450 فرقہ وارانہ واقعات

یو پی میں 3 سال میں 450 فرقہ وارانہ واقعات

نئی دہلی۔26 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) اترپردیش میں گزشتہ تین برسوں میں مجموعی طور پر فرقہ وارانہ تشدد کے 450 واقعات پیش آئے ہیں جن میں سے 162 کی اطلاع 2016ء میں موصول ہوئی، راجیہ سبھا کو آج یہ بات بتائی گئی۔ مملکتی وزیر داخلہ کرن رجیجو نے کہا کہ اترپردیش میں اس طرح کے 155 واقعات 2015ء میں اور 133 واقعات 2014ء میں پیش آئے تھے۔ مہاراشٹرا میں گزشتہ تین سال میں فرقہ وارانہ نوعیت کے 270 واقعات درج کئے گئے ہیں۔ انہوں نے تحریری جواب میں بتایا کہ مدھیہ پردیش میں اسی مدت کے دوران فرقہ وارانہ نوعیت کے 205 واقعات پیش آئے۔ راجستھان میں تین سال میں اس طرح کے 200 واقعات پیش آئے ہیں۔
جنسی جرائم بڑھنے سے 50 فیصد آبادی کو غیر محفوظ ہونے کا احساس
نئی دہلی۔26 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) قومی دارالحکومت کی 50 فیصد آبادی خواتین کے خلاف جنسی جرائم کے معاملوں میں اضافہ کے سبب خود کو غیر محفوظ تصور کرتی ہے، دہلی کی ایک عدالت نے یہ ریمارک کیا اور جنسی ہراسانی کیس کے ایک مجرم کی سزائے قید کو کالعدم کرنے سے انکار کردیا۔ عدالت نے کہا کہ اس طرح کے معاملوں میں اضافے کے نتیجہ میں لوگوں میں عدم سلامتی کا احساس پیدا ہوا ہے۔ دہلی میں خواتین اور نوجوانوں لڑکیوں کے خلاف جنسی جرائم کے معاملے عوامی مقامات اور سڑکوں پر روز بہ روز بڑھتے جارہے ہیں جس کی وجہ سے 50 فیصد آبادی کے ذہنوں میں غیر محفوظ اور عدم سلامتی کا احساس پیدا ہوگیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT