Tuesday , November 21 2017
Home / شہر کی خبریں / یو پی کے باپ بیٹے کا ڈرامہ تلنگانہ میں بھی دیکھا جائے گا ؟

یو پی کے باپ بیٹے کا ڈرامہ تلنگانہ میں بھی دیکھا جائے گا ؟

حیدرآباد /13 جنوری ( سیاست نیوز ) اترپردیش میں اقتدار کے حصول کیلئے باپ بیٹے کے درمیان رسہ کشی کو سیاسی حلقوں میں خاصکر تلنگانہ کے سیاسی گوشوں میں یہ چیہ مہ گوئیاں ہو رہی ہیں کہ 2019 کے انتخابات سے قبل ٹی آر ایس میں بھی اقتدار کیلئے باپ بیٹے کے درمیان ٹکراؤ کی نوبت آسکتی ہے ۔ یو پی میں سماج وادی پارٹی کے صدر ملائم سنگھ یادو اور چیف منسٹر اکھلیش یادو کے حامی گروپس نے انتخابی رحجان کو بدل کر رکھ دیا ہے تو یہی منظر آنے والے دو برسوں میں تلنگانہ میں دکھائی دے سکتا ہے ۔ آندھراپردیش میں چندرا بابو نائیڈو کے سیاسی اثرات کے برعکس تلنگانہ میں کے چندر شیکھر راؤ کا سیاسی موقف مضبوط و مستحکم ہے ۔ مگر تلگودیشم اور ٹی آر ایس دونوں کو آنے والے انتخابات میں مخالف حکمرانی لہر کا شکار ہونے کا اندیشہ دکھائی دے رہا ہے ۔ سیاسی گوشوں نے ٹی آر ایس کی سیاست کو یو پی کی سماج وادی پارٹی کی تکون قیادت سے تقابل کرنا شروع کیا ہے ۔ ملائم سنگھ یادو ، اکھلیش یادو اور شیوپال یادو کے تنازعات کا تلنگانہ ٹی آر ایس میں پائی جانے والی تکون قیادت کے سی آر ، کے ٹی آر اور ہریش راؤ کی شکل میں ابھرتی ہے تو کے ٹی راما راؤ اپنے والد کی جگہ حاصل کرنے کی کوشش کرسکتے ہیں ۔ 2019 کے انتخابت میں اپنے والد سے اقتدار حاصل کرنے کا موقع بہرحال تلاش کریں گے ۔

TOPPOPULARRECENT