Thursday , November 23 2017
Home / Top Stories / یکم جون کے بعد آپ پر نظر رکھی جائے گی

یکم جون کے بعد آپ پر نظر رکھی جائے گی

سونے کے زیورات کی خریدی پر PAN کارڈ ضروری
نئی دہلی ۔ 23 مئی ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) عوام کیلئے سونے کے زیورات کی خریداری اب مشکل ہوجائیگی ۔ حکومت نے یکم جون سے ٹیکس کلکشن ایٹ سورس ( ٹی سی ایس ) پر عمل آوری کا فیصلہ کیا ہے جسکے نتیجہ میں ہندوستان میںتقریباً 40 فیصد زیورات کی تجارت متاثر ہونے کا امکان ہے ۔ ٹی سی ایس کے تحت سونے کی خریداری پر PAN کارڈ لازمی ہے ۔ قبل ازیں جاریہ سال حکومت نے دو لاکھ روپئے اور اُس سے زائد نقدی لین دین پر ایک فیصد ٹی سی ایس نافذ کرنے کا فیصلہ کیا تھا ان میں لگژری ایٹمس جیسے زیورات کی خریدی شامل ہے اور اس کامقصد کالے دھن پر قابو پانا ہے ۔ حکومت نے جو رہنمایانہ ہدایات جاری کی ہیں ان کے تحت ساری رقم اگر نقد ادا کی جائے تو ایسی صورت میں بھی ٹی سی ایس ضروری ہوگا ۔ اس کا مطلب یہ ہے کہ اگر کوئی شخص پانچ لاکھ روپئے مالیتی زیورات کی خریداری کرے اور 4.5لاکھ روپئے ذریعہ چیک ادا کرتے ہوئے مابقی 50,000 روپئے کی رقم نقد ادا کرے تو ایسی صورت میں اُسے مکمل رقمی لین دین یعنی 5 لاکھ روپئے پر ایک فیصد ٹی سی ایس ادا کرنا ہوگا ۔ حکومت نے دو لاکھ روپئے اور اُس سے زائد مالیتی زیورات و صرافہ کی فروخت پر ٹی سی ایس لاگو ہے ۔ جیویلرس اور صرافہ ڈیلرس کو ماہانہ اساس پر ٹی سی ایس ادا کرنے اور دو لاکھ روپئے اور اس سے زائد مالیتی زیورات خریدنے والے صارفین کا PAN نمبر کے ساتھ ڈیٹا تیار کرکے حکومت کو پیش کرنے کی ہدایت دی ۔ یہ ڈیٹا سالانہ بنیادوں پر ٹیکس حکام کو پیش کیا جائیگا۔ جیمس اینڈ جیویلری شعبہ سے وابستہ عہدیدار نے بتایا کہ حکومت کے ان قواعد کی وجہ سے زیورات کی فروخت پر کافی منفی اثر پڑے گا کیونکہ دو لاکھ اور زائد کی خریدی کرنے والے صارفین کی تعداد تقریباً 30 فیصد ہوتی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT