Thursday , December 13 2018

۔12 مارچ سے اسمبلی کا بجٹ اجلاس متوقع

14 یا 15 مارچ کو بجٹ کی پیشکشی کا امکان ۔ چندر شیکھر راؤ
حیدرآباد ۔ 4؍ مارچ ( سیاست نیوز) تلنگانہ قانون ساز اسمبلی کے بجٹ سیشن کا جاریہ ماہ 12 ؍ مارچ سے آغاز متوقع ہے ۔ چیف منسٹر کے چندرا شیکھرراو نے اخباری نمائندوں سے غیر رسمی بات چیت کے دوران یہ بات کہی ۔ انہوں نے بتایاکہ بجٹ برائے سال 2018-19 ‘ 14؍ مارچ یا 15 ؍مارچ کو پیش کئے جانے کا امکان ہے ۔ بتایا جاتا ہے کہ ریاستی بجٹ کی تیاری مکمل کرلینے کے تمام تر اقدامات تیزی سے جاری ہیں اور توقع ہے کہ آئندہ ایک دو دن میں ریاستی بجٹ کو قطعیت دے دی جائے گی ۔ سمجھا جاتا ہے کہ چیف منسٹر چندرشیکھرراؤ نے آئندہ انتخابات کو پیش نظر رکھتے ہوئے ریاست میں درج فہرست اقوام و قبائیل و پسماندہ طبقات کے علاوہ اقلیتی طبقات کی فلاح و بہبود سے متعلق اسکیمات کی موثرعمل آوری کو یقینی بنانے کے لئے مجوزہ ریاستی بجٹ میں زیادہ سے زیادہ رقومات مختص کرنے کی متعلقہ وزراء و اعلی عہدیداروں کو ضروری ہدایات دی ہیں ۔ بتایا جاتا ہے کہ وزیر فینانس مسٹر ای راجندر مسودہ ریاستی بجٹ توقع ہے کہ ایک دو دن میں قطعیت دے کر چیف منسٹر کے چندر شیکھرراؤ کو پیش کریں گے ۔تاکہ وہ مسودہ بجٹ کا تفصیلی مشاہدہ کر کے ضرورت پڑنے پر بجٹ رقومات کے اعداد و شمار میں ترمیم کر کے منظوری دے سکیں ۔ سرکاری ذرائع کے مطابق بتایا جاتا ہے کہ مسودہ بجٹ کی چیف منسٹر کے چندرشیکھرراؤ کی جانب سے منظوری دیئے جانے کے فوری بعد بجٹ کی تفصیلات کو طباعت کے لئے روانہ کیا جائیگا ۔

TOPPOPULARRECENT