Thursday , February 22 2018
Home / شہر کی خبریں / ۔2019ء انتخابات میں کانگریس کو اقتدار ،اُتم کمار چیف منسٹر ہوں گے : سمپت کمار

۔2019ء انتخابات میں کانگریس کو اقتدار ،اُتم کمار چیف منسٹر ہوں گے : سمپت کمار

ٹی ہریش راؤ وزیر داخلہ بنیں گے ، ٹی آر ایس میں آپسی اختلافات کا آغاز ، کانگریس رکن اسمبلی کا ادعا
حیدرآباد۔15 نومبر (سیاست نیوز) کانگریس کے رکن اسمبلی سمپت کمار نے سنسنی خیز انکشاف کرتے ہوئے کہا کہ 2019ء میں کانگریس حکومت تشکیل دے گی۔ اُتم کمار ریڈی چیف منسٹر ہوں گے اور ہریش راؤ اسی کابینہ میں وزیر داخلہ رہیں گے۔ آج اسمبلی کی لابی میں میڈیا سے غیررسمی بات چیت کرتے ہوئے سمپت کمار نے چونکا دینے والا انکشاف کرتے ہوئے کہا کہ چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر کا بھانجہ ہریش راؤ جو ٹی آر ایس حکومت میں وزیر آبپاشی ہیں۔ حالیہ دنوں میں کانگریس کے بہت قریب ہوگئے ہیں۔ پہلے سے بھی ہریش راؤ کے کانگریس سے خوشگوار تعلقات رہے ہیں۔ حالیہ دنوں میں وہ ٹی آر ایس میں گھٹن محسوس کررہے ہیں اور کسی بھی وقت کانگریس میں شامل ہوں گے۔ انہیں بھی اندازہ ہوگیا ہے کہ 2019ء میں کانگریس پارٹی بھاری اکثریت سے تلنگانہ میں حکومت تشکیل دے گی۔ موجودہ صدر تلنگانہ کانگریس کمیٹی اتم کمار ریڈی چیف منسٹر ہوں گے، ان کی کابینہ میں ہریش راؤ وزارت داخلہ کے فرائض انجام دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ آج ایوان اسمبلی میں ہریش راؤ نے ان سے ملاقات کی ہے اور ملاقات میں وہ یہ بات انہیں بتا چکا ہوں۔ سمپت کمار نے کہا کہ دو دن قبل بھی ہریش راؤ ان سے اسمبلی میں ملاقات کرچکے تھے تب اخبارات میں یہ خبر شائع ہوئی تھی کہ وہ (سمپت کمار) ٹی آر ایس میں شامل ہورہے ہیں۔ حقیقت وہ نہیں ہے بلکہ یہ ہے کہ ہریش راؤ کانگریس میں شامل ہونے کے خواہش مند ہیں اور وہ کانگریس قائدین سے رابطے میں بھی ہیں۔ ضلع محبوب نگر کی نمائندگی کرنے والے سمپت کمار نے کہا کہ حکومت کی کارکردگی مایوس کن ہے کیونکہ صرف زبانی خرچ ہے۔ سماج کا کوئی بھی طبقہ حکومت سے خوش نہیں ہے۔ کار اور لوڈ ہوچکی ہے۔ کسی بھی وقت حادثے کا شکار ہوسکتی ہے۔ ٹی آر ایس کے بانی قائدین اور کارکنوں میں ناراضگی پائی جاتی ہے۔ دوسری جماعتوں کے قائدین کو ٹی آر ایس میں شامل کرتے ہوئے یہ تاثر دیا جارہا ہے کہ ٹی آر ایس مستحکم ہورہی ہے جبکہ ٹی آر ایس آپسی گروپ بندیوں اور اختلافات کا شکار ہورہی ہے۔ ٹی آر ایس کے قائدین اور کارکن ہی حکومت کے خلاف بغاوت کریں گے۔ کانگریس پارٹی اپوزیشن کا تعمیری رول ادا کررہی ہے اور عوامی مسائل کو ایوانوں اور سڑکوں پر اُٹھاتے ہوئے اس کو حل کرنے کیلئے حکومت پر دباؤ ڈال رہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT