Tuesday , September 25 2018
Home / اضلاع کی خبریں / ’’ کرشی بھاگیہ اسکیم ‘‘ پر اندرون ماہ عمل آوری

’’ کرشی بھاگیہ اسکیم ‘‘ پر اندرون ماہ عمل آوری

بیدر /24 نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) ریاستی حکومت کی جانب سے مرگب کردہ ’’ کرشی بھاگیہ اسکیم ‘‘ پر اندرون ایک ماہ عمل آوری کی جارہی ہے ۔ وزیر زراعت کرشنا بیرے گوڑا نے یہ بات بتائی ۔ بنگلور زرعی یونیورسٹی میں منعقدہ زرعی میلہ کا افتتاح ہونے کے بعد مخاطب کرتے ہوئے وزیر زراعت نے بتایا کہ کرشی بھاگیہ اسکیم کے تحت ہر کسان کو 2 لاکھ روپئے تک

بیدر /24 نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) ریاستی حکومت کی جانب سے مرگب کردہ ’’ کرشی بھاگیہ اسکیم ‘‘ پر اندرون ایک ماہ عمل آوری کی جارہی ہے ۔ وزیر زراعت کرشنا بیرے گوڑا نے یہ بات بتائی ۔ بنگلور زرعی یونیورسٹی میں منعقدہ زرعی میلہ کا افتتاح ہونے کے بعد مخاطب کرتے ہوئے وزیر زراعت نے بتایا کہ کرشی بھاگیہ اسکیم کے تحت ہر کسان کو 2 لاکھ روپئے تک سبسیڈی فراہم کی جارہی ہے ۔ اس اسکیم کیلئے 500 کروڑ روپئے امداد مختص کی گئی ۔ مہینے میں چند دن ہونے والی بارش کا پانی کھیت میں جمع کیا جائے گا ۔ اس کیلئے ضروری پلاسٹک لائینگ ، پمپ سیٹ کیلئے حکومت سبسیڈی فراہم کرے گی ۔ جب بارش نہیں ہوتی یہاں جمع کئے گئے پانی کا استعمال کرنے کا موقع حاصل ہوگا ۔ یہ یقین ہے کہ یہ اسکیم کامیاب ہوگی ۔ اس سے زراعت کو زبردست فائدہ ہوگا ۔ زرعی شعبہ کو درپیش مزدوروں کے مسئلہ کو حل کرنے خانگی حصہ داری میں ہر سرکل سطح پر زعی اوزار کرائے پر دینے کے مراکز قائم کئے جائیں گے ۔ اس کیلئے 70 کروڑ روپئے امداد مختص کی گئی ہے ۔ وزیر زراعت کرشنا بیڑے گوڑا نے بتایا کہ ریاست میں پیدا شدہ خشک سالی حالات اور بارش سے کروڑہا روپئے مالیت کی فصلوں کو نقصان ہوا ہے ۔ امداد جاری کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے 2 مرتبہ مرکزی حکومت کو مکتوب روانہ کئے گئے ہیں ۔ لیکن اب تک مرکز سے کسی بھی طرح کا رد عمل یا امداد حاصل نہیں ہوئی ۔ مرکز کی امداد کا انتظار کئے بغیر ریاستی حکومت نے سال 2014-15 میں 537 کروڑ روپئے امدادی رقم تقسیم کی ہے ۔ مرکز سے امداد حاصل ہونے کے بعد ماباقی کسانوں میں فصلوں کے نقصان کا معاوضہ ادا کرنے کیلئے اقدامات کئے جاسیں گے ۔ وزیر زراعت نے بتایا کہ ریاستی حکومت نے کسانوں میں مقدار سے زیادہ امداد فراہم کی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT