Thursday , February 27 2020

اگر پاکستانی ،روہنگیا ہندوستان میں داخل ہوسکتے ہیں تو ہندوستانی بیلگام کیوں نہیں جاسکتے ہیں؟: سنجے راوت

ممبئی: شیوسینا کے رہنما سنجے راوت نے ہفتہ کے روز بی جے پی کی زیرقیادت کرناٹک حکومت پر الزام عائد کیا کہ انہوں نے بیلگام ضلع جانے سے روک دیا ہے اور کہا ہے کہ اگر پاکستانی اور روہنگیا ہندوستان میں داخل ہوسکتے ہیں تو ہم کیوں نہیں جاسکتے۔

پاکستانی ، بنگلہ دیشی اور روہنگیا ہندوستان میں داخل ہوسکتے ہیں لیکن مہاراشٹرا سے کوئی بیلگام نہیں جاسکتا۔ یہ غلط ہے. یہاں تنازعہ موجود ہے لیکن اتنا زیادہ نہیں ہونا چاہئے کہ ایک دوسرے پر پابندیاں عائد کرنی پڑیں۔

یہ بیان اسوقت سامنے ایا جب مہاراشٹرا کے ایک وزیر کو بیلگام جانے سے روک دیا گیا۔

وہاں [بیلگام] ثقافتی اور ادب کا ایک پروگرام ہے اور میں وہاں لوگوں سے گفتگو کرنے جاؤں گا۔ اگر پابندیاں عائد کردی گئی ہیں تو پھر رہنے دو۔

اس سے قبل مہاراشٹرا کے وزیر راجندر پاٹل ییدراوکر کو کرناٹک کے بیلگاوی ضلع میں کل ایک مبینہ پروگرام میں ہاتھا پائی اور بولنے سے روک دیا گیا تھا۔

یدراوکر کو پولیس نے حراست میں لیا تھا اور انھوں نے 1980 کی دہائی میں زبان کے فسادات میں ہلاک ہونے والے مراٹھی نواز کارکنوں کی یاد میں منعقدہ شہدائے دن کے پروگرام میں تقریر کرنے سے روک دیا تھا۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT