Friday , November 22 2019

تحصیلدار کو زندہ جلادینے والے خاطی شخص کی موت

حیدرآباد ۔ 7 ۔ نومبر : ( سیاست نیوز ) : عبداللہ پور منڈل کی خاتون تحصیلدار کو زندہ جلا دینے والا خاطی شخص آج علاج کے دوران فوت ہوگیا ۔ شدید زخمی حالت میں اس شخص کو ہاسپٹل میں منتقل کیا گیا تھا ۔ جو تحصیلدار پر حملہ کے دوران شدید جھلس گیا تھا ۔ پولیس کمشنر نے اس شخص کو پھانسی کی سزا دلانے کے عزم کا اظہار کیا تھا ۔ باوثوق ذرائع کے مطابق کل شام ہی سے سریش کی صحت اچانک بگڑ گئی تھی اور اسے وینٹیلیٹر پر رکھا گیا تھا اور آج دوپہر کے وقت ڈاکٹروں نے سریش کی موت کی تصدیق کی ۔ 45 سالہ سریش مدیراج گوریلی علاقہ کا ساکن تھا ۔ جس نے 4 نومبر کے دن عبداللہ پور میٹ تحصیل آفس میں تحصیلدار وجیہ ریڈی کو زندہ جلا دیا تھا ۔ اس دوران بیچ بچاؤ کرنے والا تحصیلدار کا ڈرائیور گروناتھم بھی گذشتہ روز فوت ہوگیا تھا ۔ اس کی موت سے قبل سیاسی سازشوں کی باتیں گشت کررہی تھیں ۔ تاہم اب اس کی موت کے بعد شاید تحقیقات ماند پڑ جائیں گی ۔ عبداللہ پور میٹ پولیس نے ضابطہ کی کارروائی انجام دی ۔۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT