Friday , August 23 2019

حیدرآباد: خاتون نے بچوں کو زہر دے کر خودکشی کرلی۔

حیدرآباد: چلکل گوڑہ پولیس اسٹیشن حدودمیں ایک افسوس ناک واقعہ پیش آیا۔ شوہر کی ہراسانیو ں سے تنگ آکر عورت نے اپنے دو نوں بچوں کو زہر کھلاکر خود بھی خودکشی کرلی۔ پولیس انسپکٹر اے سی بالا ناگی ریڈی کے بیان کے مطابق پرساد اور انجلی میاں بیوی پارسی گٹہ میں اپنے دو بچوں 10سالہ انیرودھ او ر8سالہ امروتھ کے ساتھ رہا کرتے تھے۔ پرساد پیشہ سے کارپینٹر تھا لیکن کچھ دنو ں سے وہ بیروزگار ہوگیا تھا اس کے ساتھ ہی وہ نشہ کا عادی ہوچکا تھا۔

اس کی بیوی انجلی ایک خانگی اسکول میں ٹیچنگ کرتی ہے۔ پرساد انجلی سے شراب پینے کیلئے پیسہ مانگا کرتا تھا۔ نہ دینے کی صورت میں جسمانی اذیت دیا کرتا تھا۔ اسے وہ روز مارا پیٹا کرتا تھا۔ انجلی نے شوہر کی ان ہراسانیوں کی شکایت بیگم پیٹ پولیس اسٹیشن سے بھی کی تھی۔پولیس نے پرساد کو گرفتار بھی کیا تھا۔ بعد ازاں کونسلنگ کر کے مشروط ضمانت پر اسے رہا کردیا۔ دوبارہ پھر نے وہی اپنی پرانی رویش اختیار کرنے لگا۔ پھر سے بیوی کو زدو کوب کرنے لگا۔ اسے مارنے پیٹنے لگا۔

بیوی اس کی ہراسانیوں سے تنگ آکر منگل کے دن کول ڈرنک میں زہر ملاکر اپنے بچوں کو پلادی۔ پڑوسیوں نے جب دیکھا کہ ماں او ردونوں بچے زمین پر بیہوشی کی حالت میں پڑے ہوئے ہیں تو انہوں نے فوری پولیس کو اس کی اطلاع دی۔ پولیس نے نعشوں کو گاندھی اسپتال منتقل کیا جہاں ڈاکٹرس نے انجلی او رایک بچہ کو مردہ قرار دیدیا جبکہ ایک بچہ کی حالت تشویشناک بتائی جارہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT