Friday , August 23 2019

رمی کے بعد بیشتر حجاج منیٰ سے رخصت

حج کے لیے آئے اللہ کے مہانوں کی خدمت پر فخر : شاہ سلمان
حج پر آئی اہم عالمی شخصیات اور رہنماؤں کی شاہ سلمان سے ملاقات

مکہ معظمہ۔13 اگسٹ ۔(سیاست ڈاٹ کام) حجاج کرام کی بڑی تعدادآج منگل کوتیسرے دن کی رمی کرکے منٰی سے رخصت ہونے لگی۔حجاج کا رخ حرم مکی شریف کی طرف ہے جہاں پہنچ کر وہ طواف افاضہ اور الوداع کر رہے ہیں۔ حجاج نے علماء کی طرف سے دی جانے والی رعایت سے فائدہ اٹھاتے ہوئے زوال سے پہلے رمی کی ۔ بیرون ملک سے آنے والے حاجیوں میں سے بعض مدینہ منورہ کی طرف روانہ ہوں گے جبکہ مدینہ منورہ کی زیارت سے فارغ ہونے والے حاجیوں کو مکہ مکرمہ میں ٹھہرایا جائے گا۔ رمی کے تیسرے دن بعض حجاج نے علماء کی طرف سے دی جانے والی رعایت سے فائدہ اٹھاتے ہوئے زوال سے پہلے تینوں شیطانوں کو رمی کی جبکہ بعض زوال کے بعد رمی کریں گے۔ حج انتظامیہ کی طرف سے طے شدہ جدول کے مطابق بیرون ملک سے آنے والے بعض حاجی آج منٰی میں قیام کریں گے اور کل کی رمی کے بعد وہاں سے رخصت ہوجائیں گے۔ تیسرے دن کی رمی بھی انتہائی آسانی سے ہوئی۔ اس دوران کسی قسم کی بدمزگی نہیں ہوئی۔ پیشگی منصوبے کے مطابق حاجیوں نے خیموں کے حساب سے اپنے طے شدہ وقت پر رمی کی جس سے جمرات پل پر غیر معمولی ازدحام دیکھنے میں نہیںآیا۔ ادھر مکہ مکرمہ میں حرم مکی میں حجاج کی بڑی تعداد صبح سے آنا شروع ہوگئی۔ ان میں سے بیشتر اندرون ملک کے حجاج تھے۔ حجاج کی بڑھتی ہوئی تعداد کے باعث صحن مطاف زائرین سے بھر گیا۔ طواف افاضہ سے فارغ ہونے والوں کو بسوں کے ذریعہ واپس لے جانے کا انتظام کیا گیا۔ حجاج کی نقل وحرکت کو منظم کرنے اور ٹریفک کی روانی کو یقینی بنانے کیلئے محکمہ ٹریفک نے خصوصی انتظام کر رکھا ہے۔ یہ سلسلہ رات گئے تک چلتا رہے گا۔ دریں اثناء خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے کہا ہے کہ سعودی عرب کو حج کیلئے آنے والے اللہ کے معزز مہمانوں کی خدمت پر فخر ہے۔’العربیہ‘کے مطابق منیٰ کے شاہی محل میں خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز کی طرف سے دنیا بھر سے حج کیلئے آئی اہم شخصیات اور دیگر مہمانوں کے اعزاز میں استقبالیہ تقریب منعقد کی گئی۔ اس موقع پر عالمی رہنمائوں نے شاہ سلمان سے ملاقات کی۔معزز مہمانوں سے خطاب میں شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے حج کے حوالے سے سعودی عرب کی طرف سے اٹھائے گئے اقدامات اور سہولیات کا تذکرہ کیا اور ساتھ ہی کہا کہ مملکت اللہ کے مہمانوں کی بہتر سے بہتر خدمت کا عمل جاری رکھے گی۔ انہوں نے اقطائے عالم سے آئے مسلمان عالمی رہنمائوں اور دیگر حجاج کرام کو حج کی ادائی پر مبارکباد پیش کی۔ انہوں نے کہا کہ حج جیسی عظیم عبادت عالم اسلام کے اتحاد، رواداری، مذاکرات اور اخوت کا درس دیتی ہے۔ میں تمام حجاج کرام کو فریضہ حج کی ادائی پرانہیں مبارکباد پیش کرتا ہوں۔

TOPPOPULARRECENT