Wednesday , December 2 2020

شاہ میر پیٹ میں کمسن لڑکے کا اغوا و قتل کا معمہ حل

قاتل گرفتار ، جرم کا اعتراف ، پولیس کے بیان سے سنسنی برقرار
حیدرآباد :۔ شاہ میر پیٹ کے کمسن لڑکے کا اغوا کا معاملہ آج پولیس سے نہیں بلکہ قاتل کے اقبال بیان سے حل ہوگیا ۔ 5 سالہ عطیان عرف ابو کا اغوا کے بعد قتل کردیا گیا ۔ تاہم پولیس اب اس سنگین واردات کو جو شام میر پیٹ اور شہر میں سنسنی کا سبب بنا ہوا ہے ۔ محض شیر چاٹ ویڈیو کے دوران ہوا حادثہ قرار دے رہی ہے ۔ 15 اکٹوبر کو گمشدگی کی شکایت کے بعد بھی پولیس آج تک اس لڑکے کی گمشدگی کا کوئی سراغ دستیاب نہ کرسکی جو پولیس کی کارکردگی اور چوکسی پر سوالیہ نشان بن گیا ہے ۔ اغوا کنندہ اور اغوا کار جب کہ ایک ہی چھت کے نیچے زندگی بسر کررہے تھے ۔ جب تاوان کا فون آیا تو پولیس حرکت میں آگئی اور سیدھا قاتل کو گرفتار کرلیا ۔ بتایا جاتا ہے کہ 5 سالہ عطیان جو شاہ میر پیٹ علاقہ کے ساکن محمد یوسف کا لڑکا تھا ۔ 12 اکٹوبر کو اچانک لاپتہ ہوگیا ۔ یوسف پیشہ سے ڈرائیور ہے ۔ لڑکے کے اچانک غائب ہوجانے کے بعد یوسف نے پولیس سے رجوع ہونے کے بجائے دو دن تک اپنے طور پر لڑکے کو تلاش کیا ۔ بستی ، رشتہ دار ، دوست احباب تمام مقامات پر تلاشی کے بعد ناکامی سے یوسف شاہ میر پیٹ پولیس سے رجوع ہوگیا ۔ اور جس وقت یوسف پولیس سے رجوع ہوا وہ 15 اکٹوبر کا دن تھا اور 26 اکٹوبر کو لڑکے کی نعش برآمد ہوئی ۔ پولیس کے اعلیٰ عہدیدار مقام واردات پہونچ گئے اور جائزہ لیا ۔ اس دوران مقامی عوام کی کثیر تعداد شاہ میر پیٹ پولیس اسٹیشن پہونچ گئی اور احتجاج درج کروایا ۔ مقامی عوام اور یوسف کے رشتہ داروں نے پولیس پر لاپرواہی کا الزام لگایا۔ اسسٹنٹ کمشنر آف پولیس پیٹ بشیر آباد مسٹر اے وی آر نرسمہا راؤ نے بتایا کہ 17 سالہ سدھنانشو شرما کو گرفتار کرلیا گیا جو بہار کا متوطن ہے ۔ شرما اور عطیان عرف ابو ایک ہی کامپلکس میں رہتے تھے مقتول لڑکے کو قاتل اکثر اپنے ساتھ اوپر اپنے مکان میں لے جایا کرتا تھا اور شیرچاٹ پر ویڈیوز بنایا کرتا تھا ۔ اے سی پی کے مطابق مکان دار کو ایک فون کال حاصل ہوا جس میں لڑکے کا پتہ بتانے اور اس کو حوالے کرنے پر 15 لاکھ کے تاوان کا مطالبہ کیا گیا ۔ جس کے بعد پولیس نے فون کال کی جانچ کی اور سدھناشو شرما کو حراست میں لے لیا اور اس نے اپنا جرم قبول کیا ۔ پولیس کے مطابق 12 اکٹوبر کو شیر چاٹ کا ویڈیو تیار کرتے وقت لڑکے کی سر پر چوٹ لگی تھی اور وہ فوت ہوگیا تھا اور اس بات سے خوف کا شکار قاتل نے تھیلے میں باندھ کر اس لڑکے کی نعش کو آوٹر رنگ روڈ کے کنارے پھینک دیا ۔ پولیس نے بتایا کہ نعش کو پوسٹ مارٹم کے لیے منتقل کردیا گیا اور پولیس مصروف تحقیقات ہے ۔۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT