Saturday , December 5 2020

مکہ کے ہوٹلوں میں عمرہ زائرین کے لئے انتظامات

مکہ مکرمہ ۔ سعودی حج و عمرہ کمیٹی کے رکن محمد القرشی نے کہا ہے کہ بیرون ملک سے آنے والے عمرہ زائرین کے لئے مکہ میں 1800 ہوٹلوں نے انتظامات مکمل کرلیے ہیں۔ مسجد الحرام سے متصل اور آس پاس واقع ہوٹلوں کے 30 تا40 فیصد کمرے استعمال کیے جائیں گے۔ یکم نومبر سے محدود تدریجی عمرہ پروگرام کا تیسرا مرحلہ شروع ہوگا۔ اس کے تحت بیرون مملکت سے عمرہ زائرین سعودی عرب پہنچنے لگیں گے۔ وزارت حج و عمرہ نے عمرہ زائرین کی رہائش کے قواعد و ضوابط مقرر کردیے ہیں۔ تمام ہوٹلوں اور فرنشڈ اپارٹمنٹس کو آگاہ کردیا گیا۔ وزارت حج و عمرہ نے کہا ہے کہ متعلقہ اداروں نے عمرہ زائرین کی رہائش کے لیے تین، چار اور پانچ اسٹار ہوٹلوں کو اجازت نامے دیے ہیں۔ انہیں ایس او پیزکی پابندی کی ہدایت کردی گئی ہے۔ تمام ہوٹلوں سے کہا گیا ہے کہ وہ ویب سائٹس پرکمرے کے کرایے میں روزانہ تین وقت کے کھانے کا خرچ بھی شامل کریں۔ بکنگ کروانے والے کو تین دن تک کمرے میں قرنطینہ کی پابندی سے بھی مطلع کریں۔ استقبالیہ پرعمرہ زائرین کے ہرگروپ کی رہائشی کارروائی مکمل کروانے والا عہدیدار تعینات کریں۔ ویب سائٹ پر اپنے یہاں رہائش پذیر عمرہ زائرین کے اعدادوشمار جاری کرنے کی پابندی کریں۔ ہرہوٹل اپنے دس فیصد کمرے ایسے زائرین کے لیے مختص رکھیں جنہیں کورونا وائرس کا شبہ ہونے کی صورت میں الگ تھلگ ٹھہرایا جاسکے۔ ہوٹلوں پر یہ پابندی بھی لگائی گئی ہے کہ ایک کمرے میں دو افراد سے زیادہ نہ ٹھہرائے جائیں۔ ایک پلنگ سے دوسرے پلنگ کے درمیان سماجی فاصلے کی پابندی کی جائے۔کسی بھی عمرہ زائرکو تین روزہ روم آئسولیشن کی مدت مکمل کیے بغیر رہائش سے نکلنے کی اجازت نہ دی جائے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT