Monday , October 21 2019

ہندوستانی مسلمانوں کا حشر جرمنی کے یہودیوں کی طرح ہوگا

بی جے پی کے پروپگنڈہ سے بنگالی ہندو فرقہ پرست بن گئے :مارکنڈے کاٹجو
ممتا بنرجی کی مسلم خوشنودی کی عاقبت نا اندیش پالیسی نے بھی ہوادی ہے
کولکتہ ۔ /5 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) جسٹس مارکنڈے کاٹجو نے کہا کہ مغربی بنگال میں بی جے پی کے پروپگنڈہ کی وجہ سے بنگالی ہندو بھی فرقہ پرست سوچ کا شکار ہوگئے ہیں ۔ ٹوئیٹر پر اپنے سلسلہ وار پیامات میں جسٹس کاٹجو نے کہا کہ چیف منسٹر مغربی بنگال و ترنمول کانگریس سربراہ ممتابنرجی کی مسلم خوشنودی پالیسی سے بھی ماحول بگڑرہا ہے ۔ میری معلومات کے مطابق بنگالی ہندوؤں کی بڑی تعداد بی جے پی کے پروپگنڈہ اور ممتابنرجی کی مسلمانوں کو رجھانے کے لئے تیار کردہ پالیسیوں سے فرقہ پرستانہ سوچ کا شکار ہورہی ہے ۔ این آر سی کے بارے میں انہوں نے ٹوئیٹ کیا کہ ہندوستان میں رہنے والے 92 تا 94 فیصد افراد ہندوستان کے اصل متوطن نہیں ہیں بلکہ یہ تمام ایمگرینٹس ہیں ۔ بہ الفاظ دیگر یہ گھسپٹے یا درانداز ہیں اور انہیں وہاں بھیج دیا جائے جہاں سے وہ آئے ہیں ۔ جسٹس مارکنڈے کاٹجو نے خبردار کیا کہ ہندوستانی مسلمانوں کو جرمنی میں یہودیوں کی طرح چن چن کر نشانہ بنایا جائے گا ۔ بی جے پی اپنی ناکامیوں اور خرابیوں سے پیدا ہونے والی معاشی بحران سے نمٹنے کے لئے یہ حربے اختیار کرے گی ۔ ملک کی معاشی حالت بد سے بدتر ہوتے جارہی ہے اور اس کا غصہ مسلمانوں پر نکالا جائے گا ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT