Thursday , August 22 2019

اکھلیش کی مایاوتی سے ملاقات،ایگزٹ پول پر تبادلہ خیال

ایس پی لیڈر نے چندرا بابو کے پیغام سے بی ایس پی سربراہ کو واقف بھی کرایا
لکھنو ،20 مئی (سیاست ڈاٹ کام) بی جے پی کو واضح اکثریت کے ساتھ مرکز میں واپسی کی ایگزٹ پولس کی پیش قیاسی کے بعد اترپردیش میں عظیم اتحاد کے لیڈروں نے پیر کو ملاقات کر کے 23 تاریخ کو آنے والے نتائج کے ضمن میں تبادلہ خیال کیا۔ سماج وادی پارٹی سربراہ اکھلیش یادو بی ایس پی سربراہ مایاوتی کی قیامگاہ پہنچے ۔ اکھلیش اور مایاوتی کے درمیان یہ میٹنگ تقریبا 75 منٹوں تک چلی۔ سرکاری طور پر اس ضمن میں کچھ بھی اطلاع نہیں دی گئی کہ دونوں قائدین کے درمیان کس ایجنڈے پر بات چیت ہوئی۔ تاہم میٹنگ کے بعد بی ایس پی سربراہ کی رہائش گاہ کے باہر منتظر میڈیا کے نمائندوں سے اکھلیش نے کہا کہ آپ (میڈیا) کو 23 مئی تک انتظار کرناہوگا۔ وہیں دونوں لیڈروں کے بارے میں یہ توقعات ہیں کہ کہ وہ شام تک قومی دارالحکومت میں ہوں گے جہاں وہ منگل کو اپوزیشن کی میٹنگ میں شرکت کریں گے۔ لیکن دونوں پارٹیوں کے لیڈر آگے کی حکمت عملی کے بارے میں کچھ بھی کہنے سے گریز کررہے ہیں۔ ذرائع کے مطابق اکھیلیش نے مایاوتی سے مال اوینیو پر اُن کی رہائش گاہ پر طویل گفتگو کی جہاں پر انہوں نے ایگزٹ پول کی پیش قیاسیوں اور تیسرے محاذ کی حکومت کے امکانات پر تبادلہ خیال کیا۔ اس ملاقات میں انہوں نے آندھرا پردیش کے وزیر اعلیٰ چندرا بابو نائیڈو کے پیغام سے بھی واقف کرایا۔ ایگزٹ پول میں یو پی کیلئے دو طرح کی رپورٹیں ہیں، کچھ کے مطابق یو پی میں اتحاد اچھا مظاہرہ کررہاہے تو دیگر کے مطابق بی جے پی کو اتحاد پرسبقت حاصل ہے ۔

TOPPOPULARRECENT