مذہبی صفحہ

میں محمد اور احمد ہوں

عَنْ جُبَيْرِ بْنِ مُطْعِمٍ رضي اللہ عنه قَالَ : قَالَ رَسُوْلُ ﷲِ صلي اللہ عليه وآله وسلم : لِي خَمْسَةُ أَسْمَاءٍ : أَنَا مُحَمَّدٌ وَأَحْمَدُ، وَأَنَا الْمَاحِي الَّذِي يَمْحُو ﷲُ

مصباح القراء علامہ عبداﷲ قریشی الازہری ؒ

حافظ صابر پاشاہمصباح القراء حضرت علامہ مولانا حافظ و قاری محمد عبداﷲ قریشی الازہری الملتانی قبلہؒ بلاشبہ نابغۂ روزگار تھے ۔ آپؒ کی غیرمعمولی ذہانت و ذکاوت ، وسیع مطالعہ

عدتِ و فات کا مسئلہ

سوال: کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میںکہ ہندہ کے شوہر کا انتقال ہوا، سوال یہ ہے کہ ہندہ، عدت ِ وفات میں ملازمت یا کسی ضرورت کے تحت گھر

ازدواجی زندگی کے آداب ||قسط نمبر: 2

5: شریک حیات کی ضروریات پوری فراخدلی کے ساتھ پوری کرنا:پوری فراخدلی کے ساتھ شریک حیات کی ضروریات فراہم کیجئے، اور خرچ میں کبھی تنگی نہ کیجئے۔ اپنی محنت کی

بے شک ہم نے بالکل تیار کر رکھی ہے

بے شک ہم نے بالکل تیار کر رکھی ہے کفار کے لئے زنجیریں، طوق اور بھڑکتی آگ۔ بے شک نیک لوگ پئیں گے (شراب کے) ایسے جام جن میں آبِ

قیامت اس وقت تک قائم نہیں ہوگی!

حضرت ابوہریرہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روایت ہے کہ رسول کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: ’’قیامت اس وقت تک قائم نہیں ہوگی، جب تک مسلمان، یہودیوں سے

سورۂ فاتحہ کی فضیلتیں اور برکتیں

ڈاکٹر قمر حسین انصاریسورہ فاتحہ مکی ہے اوراس میں سات آیات ہیں۔​ترتیب تلاوت کے اعتبار سے پہلی صورت ہے جبکہ ترتیب نزولی کے اعتبار سے پانچویں ۔ قرآن کریم کتاب

حضرت سید شاہ افضل بیابانی ؒ

حضرت سید شاہ افضل بیابانی الرفاعی القادری رحمۃ اللہ علیہ ۱۲۱۰ھ میں تولد ہوئے۔ آپؒ کی ابتدائی تعلیم قلعہ ورنگل میں حضرت فقیر اللہ شاہ صاحب کے پاس ہوئی۔ آپؒ

غیر مسلم فسخ نکاح کرے تو نافذ نہوگا

سوال: کیا فرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ ہندہ نے عدالت دیوانی میں اپنے شوہر زید کے خلاف تنسیخ نکاح کے لئے مقدمہ دائر کیا۔ شوہر بیوی کو

ازدواجی زندگی کے آداب / قسط نمبر: 1

1: بیوی کیساتھ اچھا سلوک کرنا:بیوی کے ساتھ اچھے سلوک کی زندگی گزارئیے۔ اس کے حقوق کشادہ دلی کے ساتھ کیجئے اور ہر معاملے میں احسان اور ایثار کی روش

مسلمان، مسلمان کا بھائی ہے

عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ رضي ﷲ عنه، قَالَ : قَالَ رَسُوْلُ ﷲِ صلي اللہ عليه وآله وسلم : اَلْمُسْلِمُ أَخُو الْمُسْلِمِ لَا يَخُوْنُهٗ وَلَا يَکْذِبُهٗ وَلَا يَخْذُلُهٗ، کُلُّ الْمُسْلِمِ عَلَي الْمُسْلِمِ