نئی نسل کو اُردو سکھانے کے لئے موبائیل ایپ لانچ کریں گے۔ ڈاکٹر شیخ عقیل احمد

قومی کونسل کے ڈائرکٹر نے کہاکہ’نئی نسل اُردو کی طرف زیادہ راغب نہیں ہورہی ہے‘ ہماری کوشش ہے کہ ان کی اُردو میں دلچسپی پیدا ہو

سری نگر۔ قومی کونسل برائے فروغ اُردو زبان کے ڈائرکٹر ڈاکٹر شیخ عقیل احمد نے کہاکہ کونسل نئی نسل کو اُردو کی طرف راغب کرنے اوراُردو سیکھنے کا ذوق وشوق رکھنے والوں کے لئے عنقریب ایک موبائل ایپ لانچ کرنے والی ہے۔

انہو ں نے متذکرہ موبائیل ایپ پر کام جاری ہے او ریہ اپنی نوعیت کی ایک منفرد ایپ ہوگی۔ یواین ائی اُردو کودئے گئے ایک انٹرویو میں انہوں نے کہاکہ نئی نسل اُردو کی طرف زیادہ راغب نہیں ہورہی ہے‘

ہماری کوشش ہے کہ ان کی اُردو میں دلچسپی ہو اس کے لئے کونسل بہت سارے پروگرام کررہی ہے او رنئی نسل کی موبائیل کے ساتھ گہری وابستگی کے پیش نظر ہم ایک موبائیل ایپ لانچ کریں گے جس سے نئی نسل اُردوکی طرف راغب ہوگی اور اُردو سیکھنے کا ذوق وشوق رکھنے والے اُردو سیکھ سکیں گے۔

اُردو کے فروغ کے لئے شروع کئے جانے والے موبائیل ایپ کے بارے میں تفصیلات فراہم کرتے ہوئے ڈاکٹر عقیل احمد نے کہاکہ اس موبائیل ایپ کے اندر اُردو سیکھنے کے جتنے بھی پہلو ہیں انہیں ڈالا جائے گا جیسے کسی بڑے فلمی اداکارہ یااداکارہ کے ایک ایک یادومنٹوں پر اُردو کے حق میں تاثرات ہوں گے۔

اس کے بعد اُردو سیکھنے کے لئے ہمارے پاس جو کتابیں ہیں ان کے ہرباب کو ایک ایک کرکے سکھایاجائے گا اُردو کے حرف تہجی کو پڑھنا اورلکھنا سکھایاجائے گا۔

انہوں نے کہاکہ جب وہ اُردواچھی طرح سیکھ لیں گے تو موبائیل ایپ میں شعرائے کرام کی اچھی غزلیں ڈالی جائیں گی انہیں سیکھایاجائے گا‘ مثلاًاگر کوئی علامہ اقبال کی غزل سننا چاہتا ہے تو غزل نہ صرف لکھی ہوگی بلکہ اس کو آواز میں پڑھا بھی جائے گا تاکہ اس کی ادائیگی کو بھی سیکھا جاسکے۔

ڈاکٹر عقیل نے کہاکہ اسی طرح موبائیل ایپ میں چھوٹے چھوٹے افسانے اور بچوں کے افسانے بھی ڈالے جائیں گے‘ افسانے بھی لکھے ہوں گے اور انہیں پڑھا بھی جائے گا تاکہ پتہ چل سکے کس لفظ کا کیاتلفظ ہے۔ انہو ں نے کہاکہ نوجوانوں میں سے بہترین شعراء کو ایک فہرست بھی مرتب کی جائے گی اور ان کی صلاحیتوں کو نکھارنے کے لئے انہیں ایک بڑا پلیٹ فارم فراہم کیاجائے گا۔

انہوں نے کہاکہ اس موبائیل ایپ میں ایک پرویژن ایسا بھی ہوگا جس میں ملک کے نوجوان شعراء سے اپنا کلام اپ لوڈ کرنے کو کہاکائے گا او رپھر ان میں سے جن دس بارہ اشعرا کاکلام معیاری بہتر ہوگا ان کی ایک فہرست مرتب کی جائے گی او رانہیں ایک پلیٹ فارم فراہم کیاجائے گا اوران کے لئے ایک مشاعرہ کا بھی اہتمام کیاجائے گا اس طرح ان کی ہمت افزائی بھی ہوگی اور وہ آگے بڑھ سکیں گے‘ اسی طرح افسانے نگاروں سے بھی کہاجائے گا وہ اپنے افسانے پڑھ کر اپ لوڈ کریں۔

انہو ں نے کہاکہ اگر ایسا کرنے میں کامیابی ہوئے تو نئی نسل موبائیل پر ہی اُردوسیکھ سکتی ہے او رغزلیں بھی بھی سن سکتی ہے۔

اس موبائیل ایپ کے بارے میں پوچھے گئے سوال کہ یہ موبائیل ایپ کب تک لانچ ہوسکتی ہے کے جواب میں ڈاکٹر عقیل احمد نے کہاکہ اس پر کام جاری ہے متعلقین کو ایک مکتوب بھیج دیاگیا ہے ان کے ساتھ دس پندرہ دنوں کے اندر ایک میٹنگ کریں گے او رپھر لائحہ عمل مرتب کریں گے جس کو بہت جلد عملی جامعہ پہنایاجائے گا۔

انہو ں نے کہاکہ اس سلسلے میں نیوز18کے گروپ ایڈیٹر راجیش رینہ کے ساتھ بھی بات چیت ہوئی ہے اور ان سے بھی کافی مشورہ حاصل کئے گئے ہیں

TOPPOPULARRECENT