Wednesday , January 16 2019

ایران و عراق کے دفاعی تعلقات

تہران 13 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) ایرانی اسپیکر کے معاون خصوصی برائے بین الاقوامی امور نے عراق کے سابق وزیر داخلہ کے ساتھ ملاقات میں کہا کہ ایران، عراق کے ساتھ قریبی دفاعی شراکت داری جاری رکھے گا۔ایرانی اسپیکر کے معاون خصوصی برائے بین الاقوامی امورحسین امیر عبداللہیان نے عراقی پارلیمنٹ کے رکن برائے خارجہ پالیسی اور سابق وزیر داخلہ محمد الغبان کے ساتھ ملاقات میں دونوں ممالک کی باہمی تعاون کی توسیع پر زوردیا۔ انہوں نے عراق کی نئی پارلیمنٹ اور حکومت کے کاموں کے باضابطہ آغاز پر مبارکباد پیش کرتے ہوئے دونوں ممالک کی پارلیمنٹ کے درمیان باہمی تعاون کے فروغ پر زوردیا۔عبداللہیاں نے امریکی فوجیوں کی شام سے عراق منتقلی پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے نزدیک عراق کی سلامتی، ایران کی سلامتی کے مترداف ہے لہذا ہم خطے کے ممالک کے اندرونی معاملات میں امریکیوں کی دخل اندازی کو خطے کی سلامتی کے منافی سمجھتے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ عراقی حکومت اور عوام نے اپنی سرزمین کے دفاع اور دہشت گردی کے خلاف جنگ میں اہم کردار ادا کیا ہے۔ اس موقع پرعراق کے سابق وزیر داخلہ نے بھی ایران کی جانب سے عراقی حکومت اورعوام کی بدستور حمایت کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ عراق کی حکومت اور پارلیمنٹ نے ہمیشہ ملک کی سلامتی اور استحکام کے راستے میں قدم اٹھایا ہے۔

TOPPOPULARRECENT