Wednesday , September 30 2020

شکاگو میں لوٹ مار اور تشدد کے بعد 100 افراد گرفتار

شکاگو: شکاگو کے اعلیٰ ترین میگنفینٹ مائل شاپنگ ڈسٹرکٹ میں گذشتہ شب لوٹ مار اور تشدد کے واقعات میں ملوث زائد از 100 افراد کو گرفتار کرلیا گیا۔ اس واقعہ میں 13 پولیس افسران زخمی ہوئے جبکہ شاپنگ ڈسٹرکٹ میں شدید نقصانات بھی نوٹ کئے گئے۔ دریں اثناء پولیس سپرنٹنڈنٹ ڈیوڈ براؤن نے کہا کہ یہ کوئی احتجاجی مظاہرہ نہیں تھا بلکہ مجرمانہ طور پر لوٹ مار کی گئی تھی۔ گذشتہ دن ایک پولیس آفیسر کے ہاتھوں ایک شخص کی ہلاکت کے بعد یہ واقعہ پیش آیا۔ پولیس پر فائرنگ کی گئی تو پولیس نے بھی جوابی فائرنگ کی۔ براؤن نے بتایا کہ شہر کے قلب میں اب پولیس کی زائد تعداد کو تعینات کیا جائے گا جنہیں گرفتار کیا گیا ہے ان پر لوٹ مار کے الزامات کے علاوہ پولیس پر حملہ کرنے کا قصوراور بھی قرار دیا گیا ہے۔ یاد رہیکہ 25 مئی کو سیاہ فام جارج فلائیڈ کی ہلاکت کے بعد ہوئے احتجاج کے دوران بھی توڑپھوڑ اور لوٹ مار کے متعدد واقعات پیش آئے تھے تاہم کچھ عرصہ بعد حالات معمول پر آ گئے تھے۔ جارج فلائیڈ کی ہلاکت کے بعد منیا پولیس میں حالات بیحد خراب ہوگئے تھے اور احتجاج کا سلسلہ کئی روز تک جاری رہا تھا۔ پولیس نے اتوار کی شب شکاگو کے میگنفینٹ مائل جو پڑوسی علاقہ اینجل ووڈ میں واقع ہے، ایک شخص کو گولی مار کر زخمی کردیا تھا۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT