ٹرین میں ہجوم نے کشمیریوں کو پیٹ ڈالا ۔ ذریعہ معاش کیلئے یہا ں کیوں آتے ہو ؟

پلوامہ حملہ کے بعد کشمیریوں کو جگہ جگہ نشانہ بنائے جانے کی خبریں مسلسل آ رہی ہیں۔ اسی بیچ دلی کے سرائے روہیلا اسٹیشن پر تین شال بیچنے والے کشمیریوں نے الزام لگایا کہ کچھ نامعلوم لوگوں نے ’ پتھرباز‘ کہہ کر ان کی پٹائی کر دی۔ اس ہنگامہ میں بھیڑ بھی حملہ آوروں کے ساتھ شامل ہو گئی۔

اس بارے میں ڈی سی پی (ریلوے) دنیش گپتا نے بتایا، ‘ہریانہ کے سانپلا جانے کے لئے شال بیچنے والے تین کشمیری نوجوان ایک لوکل ٹرین میں سوار ہوئے تھے۔ اسی وقت کچھ نوجوانوں نے انہیں گندی گالیاں دینا شروع کر دیں اور جب انہوں نے اعتراض کیا تو نوجوانوں نے کہا کہ تم وہاں پتھر پھینکتے ہو اور روزی-روٹی کے لئے یہاں آتے ہو۔ اس کے بعد وہ تینوں کشمیری نوجوان اپنا بیگ چھوڑ کر نانگلوئی میں ہی اتر گئے۔ بیگ میں تقریبا دو لاکھ روپیے کی قیمت کی شال تھی‘‘۔ انہوں نے کہا کہ کیس درج کر لیا گیا ہے۔ تحقیقات کی جا رہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT