Saturday , October 19 2019

پارلیمنٹ سے باہر نکل کربھڑک گئیں ترنمول کانگریس کی رکن پارلیمنٹ نصرت جہاں، کہا- دھکا مت دو۔

ترنمول کانگریس کی نومنتخب رکن پارلیمنٹ نصرت جہاں روحی اورمی می چکرورتی نے منگل کولوک سبھا رکن کے طورپرحلف لینے کے لئے پارلیمنٹ پہنچیں۔ حلف لینے کے بعد دونوں اراکین پارلیمنٹ اس وقت بوکھلا گئیں جب ایوان سے باہرآتے ہوئے میڈیا نے ان کا راستہ روک لیا۔ دونوں اداکارہ سخت ناراض ہوگئیں اورتیز آواز میں بولنے لگیں۔

دراصل نصرت جہاں اورمی می چکرورتی جیسے ہی ایوان سے باہرنکلنے لگیں تو میڈیا رپورٹروں نےان کو گھیرلیا اور ان سے سوال پوچھنے اوران کی تصویریں لینےلگے۔ ان سب سے پریشان ہوکرنصرت جہاں اورمی می چکرورتی ناراض ہونے لگیں اورانہوں نے تیزآواز میں ان سے پیچھے ہٹنےکے لئے کہا تاکہ وہ باہرنکل سکیں۔

حالانکہ دونوں نے کافی حد تک میڈیا والوں کے سوالوں کے جواب دینے کی کوشش کی۔ تاہم کچھ وقت کے بعد می می چکرورتی نے میڈیا کے نمائندوں کو ہٹنےکے لئےکہا تھا کہ وہ وہاں سے جاسکیں، لیکن جب ایسا نہیں ہوا تو وہ بے چین ہوگئیں۔ راستہ نہ ملنے پر می می چکرورتی کسی طرح اپنی جگہ سے ہٹ کرنصرت کے پیچھے جاکر کھڑی ہوگئیں۔ ایک وقت ایسا آیا جب وہ پریشان ہوکر واپس پارلیمنٹ میں جانے لگیں، لیکن بعد میں وہ دونوں باہر آگئیں۔ جب وہاں موجود سیکورٹی اہلکاروں نے ان کے لئے راستہ بنانے کی کوشش کی۔

ان سب کے درمیان نصرفت جہاں نے اپنی دوست می می چکرورتی کا ہاتھ پکڑ کرکہا – ‘آپ دھکا نہیں مار سکتے سر، سمجھئے بات کو’۔ اس کے بعد دونوں کسی طرح اپنی گاڑی تک پہنچ سکیں۔ میڈیا نمائندوں نے ان دونوں سے ساتھ میں تصویر کھنچوانے کے لئے کہا۔ فوٹو کھنچوانے سے پہلے دونوں اداکاراوں نے میڈیا والوں کو برابر دوری سے ایک لائن میں کھڑے ہوکر فوٹوکھینچنے کےلئےکہا۔ واضح رہے کہ نصرت جہاں نے حال ہی میں کولکاتا کے تاجر نکھل جین سے شادی کی ہے۔ نصرت جہاں اورمی می چکرورتی دونوں نے ہی منگل کولوک سبھا رکن کے طور پر حلف لیا ہے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT